وڈ ایکسیڈینٹ میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے۔ اکثر یو ٹرن رکاوٹیں لگا کر بند کر دیے گئے ہیں

(جہلم اخبار)روڈ ایکسیڈینٹ میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے۔ اکثر یو ٹرن رکاوٹیں لگا کر بند کر دیے گئے ہیں اور جو کھلے ہیں وہ مناسب انتخاب نہیں ہے۔شہریوں کی میڈیا سے گفتگو
تفصیلات کے مطابق آئے روز جی ٹی روڈ پر ایکسیڈینٹ کی خبر سننے کو ملتی ہے اور ان میں زیادہ تر یو ٹرن پر ہوتے ہیں۔ میڈیا نمائندگان نے جب شہریوں سے اس موضوع پر گفتگو کی تو ان کا کہنا تھا کہ این ایچ اے نے اکثر یو ٹرن رکاوٹیں لگا کر بند کر دیے ہیں اور جو ٹریفک کے لیے کھولے ہیں وہ مناسب جگہ پر نہیں بنائے گئے ہیں۔یو ٹرن بند ہونے کی وجہ سے سڑک کے دونوں اطراف میں گاڑیاں لمبے عرصے کے لیے اکثر و اقات کھڑی رہتی ہیں اس سے گزرنے والے کو اندازہ ہی نہیں ہوتا کہ گاڑی چلنے لگی ہے۔ جو یو ٹرن کھلے ہیں ان کی جگہ نا مناسب ہونے کی وجہ سے ہر وقت اس پر رش رہتا ہے اور ٹریفک کی روانی کا کوئی طریقہ کار نہیں ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ بائی پاس جو یو ٹرن ہے وہ انتہائی خطرناک ہے اس جگہ ٹریفک پولیس کی ضرور ڈیوٹی لگانی چاہیے یا پھر فل فور اس یو ٹرن کو تبدیل کر دینا چاہیے۔عوام بے بس ہے کوئی سننے والا نہیں اور کسی کا لخت جگر اس دنیا سے چلا جائے کسی کو کوئی دکھ نہیں صرف وقتی دکھاوئے کے طور پر بیان بازی کر دی جاتی ہے۔ لہذا ہمارے انتظامیہ سے درخواست ہے کہ اس پر سنجیدگی سے نوٹس لیں اور اس مسئلہ کو حل کریں تا کہ روڈ ایکسیڈینٹ میں کمی لائی جا سکے

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on Google+