اپنی بہو کے اغواء کا ڈرامہ رچانے والی نوسرباز ساس بہو سمیت گجرانوالہ سے پولیس نے چھاپہ مار کر گرفتار کر لیا ملزمان خواتین کو تھانہ سول لائن پولیس جہلم نے حوالات میں بند کر دیا

جہلم (ڈاکٹر عمران جاوید خان) اپنی بہو کے اغواء کا ڈرامہ رچانے والی نوسرباز ساس بہو سمیت گجرانوالہ سے پولیس نے چھاپہ مار کر گرفتار کر لیا ملزمان خواتین کو تھانہ سول لائن پولیس جہلم نے حوالات میں بند کر دیا،تفصیلات کے مطابق چار ماہ قبل گجرانوالہ کی رہائشی خاتون ممتاز بی بی زوجہ مشتاق احمد سیالکوٹ روڈ محلہ حاجی پارک گوجرانوالہ نے جہلم تھانہ سول لائن میں ایف آئی آر درج کرواتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ میری بہو نغمانہ کوثرکو تحصیل دینہ کے نواحی گاؤں افغان آباد کے رہائشی ذیشان ظہور ولد ظہور اقبال،ظہور اقبال ولد محمد رفیع و دیگر تین نامزد ملزمان اور چند نامعلوم افراد نے جہلم عدالت پیشی کے دوران اغواء کر لیا ہے میری بیٹی کو بازیاب کروایا جائے جس پر تھانہ سول لائن میں مقدمہ درج کر لیا گیا تھا گزشتہ روز تفتیشی افسرتھانہ سول لائن جہلم نعیم نے مغوی خاتون نغمانہ کوثر کو اس کی ساس سمیت گوجرانوالہ سے ان کے اپنے ہی گھر سے مخبر خاص کی اطلاع پر چھاپہ مار کر گرفتار کر لیا ان دونوں خواتین نے پولیس کو بے وقوف بنایا اور بے گناہ افراد کیخلاف انتقامی کاروائی کروائی یہ خواتین اس سے قبل بھی تھانہ منگلاکینٹ کو نوسربازی کے کیس میں مطلوب ہیں او ر تھانہ مندرہ میں بھی نوسربازی کے مقدمات میں مطلوب ہے پولیس تھانہ سول لائن جہلم ان دونوں نوسرباز خواتین ممتاز بی بی زوجہ مشتاق احمد اور نغمانہ کوثر زوجہ محمد عمران سے تفتیش کے عمل میں مصروف ہے۔یہ خواتین پیشہ ور نوسرباز گروہ کا حصہ ہیں ان کے خلاف سخت سے سخت قانونی کاروائی عمل میں لائی جانی چاہیے اور اس پورے گروہ کو اپنے کیفر کردا رتک پہنچایا جائے تاکہ دوبارہ کوئی بھی نوسر بازجھوٹ کا سہارا لے کر عدالت اور پولیس کو گمراہ نہ کر سکے اور کسی بے گناہ شخص کیخلاف جھوٹی کاروائی نا کروا سکے۔

Share on FacebookTweet about this on TwitterShare on Google+